Raiwind Jor 2015 Bayans Listen & Download

Arrow up
Arrow down

+

20 - جنوری - 2018
۲ - جمادى الأولى - ۱۴۳۹

سوال:

بعض دفعہ جب ڈاکٹرکسی مریض کوبھیجتاہے (Refer) کرتاہے کسی پرائیویٹ ہسپتال یاکسی ٹیسٹ کیلئے یاالٹراساؤنڈکیلئے یاسی ٹی سکین کیلئے تووہ پرائیویٹ ہسپتال والے، لیبارٹری والے، سی ٹی سکین والے ڈاکٹرکوکچھ رقم دیتے ہیں توکیاڈاکٹرکیلئے یہ رقم لیناجائزہے؟ اس کواپنے استعمال میں لاسکتاہے یاوہ رقم کسی غریب کودیدے یااسی مریض کوواپس کردے؟


جواب:

اس کے حکم میں وہی تفصیل ہے جوجواب نمبر4 1 میں لکھی گئی ہے اوراس تفصیل کے مطابق جس صورت میں کمیشن لیناڈاکٹرکیلئے جائزہے تواس رقم کواستعمال کرناڈاکٹرکیلئے جائزہے۔ مریض کوواپس کرنایاکسی غریب کودیناکوئی ضروری نہیں۔ اورجس صورت میں کمیشن لیناڈاکٹرکیلئے جائزنہیں بلکہ یہ رقم جہاں سے وصول کی ہووہاں واپس کرناضروری ہے۔


حوالہ:


Fatwa No. fno68.410

View Original Fatwa | Download Original Fatwa

comments powered by Disqus

Go to top
JSN Boot template designed by JoomlaShine.com