Raiwind Jor 2015 Bayans Listen & Download

Arrow up
Arrow down

+

20 - جنوری - 2018
۲ - جمادى الأولى - ۱۴۳۹

سوال

ڈاکٹرکی سرکاری رہائش ہسپتال کے بالکل قریب ہے اوراس کے سرکاری رہائش پربجلی نہیں ہے اورنہ گورنمنٹ اس کوبجلی لگاکردیتی ہے۔ گورنمنٹ ٹال مٹول کرتی رہتی ہے توکیاڈاکٹرہسپتال سے بجلی لے سکتاہے اوربل کی رقم اندازے سے ہسپتال کی ضروریات پرلگادے کیایہ شرعاً جائزہے؟


جواب:

حکومت کی اجازت کے بغیرسرکاری ہسپتال کی بجلی ڈاکٹرکے لئے اپنی رہائش گاہ پرلے جاناجائزنہیں۔


حوالہ:

فی القرآن المجید: یاایہاالذین امنواأ اطیعواللّٰہ وأطیعواالرسول وأولی الامرمنکم …… الآیۃ۔ سورۃ النساء
فی التفسیرالمظہری عن أبی ھریرۃؓ قال: ہم الامراء وفی الفظ ہم امراء السرایاہذالفظ عام یشتمل الملوک وامراء الاحصاروالقضات وامراء السرایاوالجیوش۔ (۲/۱۵۱ واللّٰہ تعالٰی اعلم)۔


Fatwa No. fno459.47

View Original Fatwa | Download Original Fatwa

comments powered by Disqus

Go to top
JSN Boot template designed by JoomlaShine.com